امریکہ کا اضافی ڈیوٹی عائد کرنے کا فیصلہ باعث تشویش ہے، جرمن چانسلر

اضافی ڈیوٹی  ایک اچھا اقدام نہیں ہے،  جس کا اثر نا صرف ایک ملک پر بلکہ عالمی معیشت پر پڑے گا اور اس عمل  سے کوئی بھی نفع میں نہیں رہے گا

امریکہ کا اضافی ڈیوٹی عائد کرنے کا فیصلہ باعث تشویش ہے، جرمن چانسلر

جرمن چانسلر انگیلا مرکل  کا کہنا ہے کہ متحدہ امریکہ  کی جانب سے  اسٹیل اور ایلومینیم  کی درآمدات پر اضافی ٹیکس عائد کرنا ہر کس کو خسارہ   پہنچائے گا۔

انگیلا مرکل نے میونخ میں جرمن  معیشت کے نمائندوں سے ملاقات کے بعد اپنے اعلان میں کہا ہے کہ  بعض مصنوعات پر اضافی ڈیوٹی کا فیصلہ کرنے والے امریکہ  کا یہ فیصلہ ہم سب کے لیے باعث  تشویش ہے۔

انہوں نے کہا کہ اضافی ڈیوٹی  ایک اچھا اقدام نہیں ہے،  جس کا اثر نا صرف ایک ملک پر بلکہ عالمی معیشت پر پڑے گا اور اس عمل  سے کوئی بھی نفع میں نہیں رہے گا۔

اس بنا پر اس معاملے پر امریکہ کے ساتھ مذاکرات کرنے کی خواہش رکھنے پر توجہ مبذول کرانے والی مرکل نے کہا کہ "فطری طور پر یورپی فریق  اس کے خلاف رد عمل کا مظاہرہ کرے گا۔ "

اس موضوع پر اولین طور پر امریکہ کے ساتھ مذاکرات کرنے کا ارادہ   رکھنے کااظہار کرنے والی مرکل نے  ایک سوال کہ  "کیا آپ واقعی میں امریکہ کے ساتھ تجارتی جنگ چھڑ سکنے پر  خوفزدہ  ہیں ؟" کے جواب میں کہا کہ میں جنگ  کے الفاظ صرف نہیں کرنا چاہتی، یہ  سوچ اسوقت ہمارے لیے بار آور ثابت نہیں  ہو سکتی۔ "

 



متعللقہ خبریں