حماس اور الفتح کے درمیان مصالحت،معاہدہ طے ہوگیا

فلسطین کی انتہا پسند تنظیم حماس اور فلسطینی انتظامیہ  کے ساتھ منسلک الفتح کے درمیان مصالحتی معاہدے  کو حتمی شکل دے دی گئی ہے جس کے تحت اب غزہ پر فلسطینی انتظامیہ  کی عملداری قائم کی جائے گی

حماس اور الفتح کے درمیان مصالحت،معاہدہ طے ہوگیا

فلسطین کی انتہا پسند تنظیم حماس اور فلسطینی انتظامیہ  کے ساتھ منسلک الفتح کے درمیان مصالحتی معاہدے  کو حتمی شکل دے دی گئی ہے۔

فلسطینی میڈیا  کے مطابق، انتہا پسند تنظیم کے سربراہ اسماعیل  حانیہ  نے اس معاہدے کے طے پانے کی تصدیق کی ہے۔

 حماس اور الفتح کے وفود اس مصالحتی دستاویز کو مرتب کرنے میں دس اکتوبر سے مصری دارالحکومت قاہرہ میں مذاکراتی عمل جاری رکھے ہوئے تھے۔

اس مصالحتی عمل میں یہ طے ہو گیا ہے کہ اب غزہ پر فلسطینی انتظامیہ  کی عملداری قائم کی جائے گی۔

واضح رہے کہ  دونوں فلسطینی تنظیموں کے درمیان ايک عرصے سے اختلافات چلے آ رہے تھے جبکہ  امریکہ اور یورپی یونین حماس کو ایک دہشت گرد تنظیم خیال کرتے ہیں۔

 



متعللقہ خبریں