ترکی کے اخبارات سے جھلکیاں12.10.17

ترکی کے اخبارات سے جھلکیاں12.10.17

ترکی کے اخبارات سے جھلکیاں12.10.17

*** روزنامہ ینی شفق "امریکہ ویزے کے بحران کے حال کے لئے متحرک ہو گیا ہے،  وفد بھیجا جا رہا ہے" کی سرخی کے ساتھ شائع کردہ خبر میں لکھتا ہے کہ دعوے کے مطابق امریکہ کی وزارت خارجہ سے ایک وفد ویزے کے بحران سے متعلق مذاکرات کے لئے آئندہ ہفتے ترکی پہنچ رہا ہے۔ امریکہ کی وزارت خارجہ کے حکام کے مطابق وفد کی سربراہی وزارت خارجہ  کے نائب مشیر جوناتھن کوہن  کریں گے۔ امریکہ کے سفارت خانے نے اتوار کی رات اپنے ٹویٹر پیج سے ترکی  کے ویزوں کو ملتوی کرنے کا اعلان کیا تھا۔ جواب میں ترکی کے سفارت خانے نے بھی بدل کے اصول کے دائرہ کار میں اسی متن کے ساتھ امریکہ کے لئے ویزوں کے التوا کا اپنے ٹویٹر پیج سے اعلان کیا تھا۔  صدر ایردوان نے امریکی اقدام کا یہ جواب دینے  سے متعلق احکامات جاری کرنے کا اعلان کیا تھا۔ واضح رہے کہ  فیتو دہشت گرد تنظیم سے رابطے کے دعوے سے امریکی قونصل خانے  کے ایک اہلکار  کو عدالت میں بھیجا گیا جہاں اسے گرفتار کر لیا گیا تھا۔

 

*** روزنامہ اسٹار " ترکی  کوبحر روم  سے امیدیں ہیں، پہلی گہری ڈرلنگ سال 2018 میں شروع کی جائے گی" کی سرخی کے ساتھ شائع کردہ خبر میں لکھتا ہے کہ انطالیہ میں توانائی کے سربراہی اجلاس  میں سوالات کے جواب دیتے ہوئے وزیر توانائی و قدرتی وسائل بیرات آلبائراک نے کہا  ہے کہ  پیٹرول اور قدرتی گیس کی تلاش کے لئے بحر روم میں پہلی گہری ڈرلنگ کا  کام سال 2018 کے آغاز میں کیا جائے گا۔ آلبائراک نے کہا ہے کہ ہمیں بحر روم سے بہت امیدیں ہیں۔ ڈرلنگ کے اس کام کے ساتھ بڑی مقدار میں مالیت کے مواقع بھی میسر آئیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ترکی کے مزید بلند درجے تک پہنچنے کے لئے توانائی میں بیرونی انحصار میں کمی نہایت اہمیت  رکھتی ہے۔

 

*** روزنامہ صباح " دہشتگردی کے کوریڈور کے لئے 4 آپریشن" کی سرخی کے ساتھ شائع کردہ خبر میں لکھتا ہے کہ  ترکی کے عراق اور شام کے شمال میں دہشتگردی کے کوریڈور  کی سازش کے خلاف متوقع طویل المدت فوجی پلان  کی تفصیلات کے مطابق ترکی اور آزاد شامی فورسز کی  حطائے ۔ریحان لی   سرحد سےروانہ ہونے والی  ابتدائی یونٹ وسطی ادلیب کے علاقے دارالعزت میں پہنچے گی۔ یونٹ کا پہلا ہدف ادلیب سے دہشت گرد عناصر کی صفائی کے لئے  آپریشن کرنا ہے اور اس آپریشن کو دارالعزت سے کنٹرول کیا جائے گا۔

 

*** روزنامہ وطن "ترکی اور ایران کے درمیان خبروں کے تبادلے کے لئے  تعاون" کی سرخی کے ساتھ لکھتا ہے کہ حالیہ دنوں میں  ترکی اور ایران کے درمیان ڈپلومیسی ٹریفک میں اضافہ ہو گیا ہے اور اب دونوں ممالک  علیحدگی پسند دہشت گرد تنظیم PKK کے خلاف مشترکہ جدوجہد شروع کر رہے ہیں۔ جدوجہد میں دہشتگردی کے خلاف سرحدی سکیورٹی، خبروں کے تبادلے اور کوآرڈینیشن جیسے موضوعات  میں تعاون کیا جائے گا۔ پہلے مرحلے میں دونوں ممالک کے درمیان PKK کے فزیکل رابطے کو  ختم کئے جانے کا ہدف قائم کیا گیا ہے۔

 

*** روزنامہ خبر ترک "قومی پیداوار آلتائے ٹینک اپنی سیریل پیداوار کی تیاریوں میں" کی سرخی کے ساتھ لکھتا ہے کہ دفاعی صنعت کے مشیر اسماعیل دیمیر نے کہا ہے کہ ملکی وسائل سے تیار کئے جانے والے لڑاکا ٹینک آلتائے  کی سیریل پیداوار کے لئے کھولے گئے ٹینڈر کے لئے ہم تجاویز کے منتظر ہیں۔  مستقل صنعتکاروں اور سرمایہ کاروں کی تنظیمMSIAD کی طرف سے منعقدہ کانفرنس  میں ٹینک کی سیریل پیداوار سے متعلق ایک سوال کے جواب میں کہا کہ "اس وقت ہم تجاویز کے منتظر ہیں"۔ واضح رہے کے سابق وزیر دفاع فکری اشک  نے ماہِ جولائی میں ٹینک کی سیریل پیداوار کے لئے ٹینڈر کھولنے کا اعلان کیا تھا۔



متعللقہ خبریں