ایران کو بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی کی اجازت نہیں دی جائیگی

جوہری معاہدے پر  نئے سرے سے مذاکرات نہیں کیے جائینگے ، ایران

ایران کو بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی کی اجازت نہیں دی جائیگی

امریکہ کی اقوام متحدہ میں دائمی مندوب نکی ہیلے  کا کہنا ہے کہ ایران  کے جوہری معاہدے کی آڑ میں بین الاقوامی  قوانین کی خلاف ورزی کی اجازت نہیں  دی جانی چاہیے۔

ہیلے نے ایک تحریری اعلان  جاری کرتے ہوئے کہا  ہے کہ ان کا ملک جوہری معاہدے کی شرائط پر کار بند رہے گا  تا ہم  یہ ایران کے خطرناک اور استحکام کو بگاڑنے والے  مؤقف کے  سامنے  رواداری کا مظاہرہ نہیں  کرے گا۔

ادھر ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف  نے ٹویٹر    پر امریکی صدر ٹرمپ کے فیصلے پر اپنے جائزے پیش کرتے ہوئے  اس بات کا ایک بار پھر اعادہ کیا کہ  جوہری معاہدے پر  نئے سرے سے مذاکرات نہیں کیے جائینگے ، انہوں نے  ٹرمپ کو  ایک بین الاقوامی معاہدے کو کمزور بنانے  کی نا امیدی کی کوششیں کرنے کا مورد ِ الزام ٹہرایا۔

دوسری جانب جرمن وزارت خارجہ نے  اعلان کیا ہے کہ ایران  کے ساتھ طے پانے والے معاہدے پر عمل درآمد کو مزید  آگے  لیجانے کے لیے برطانیہ  اور فرانس کے  ہمراہ  کوششیں صرف کی جائینگی۔

 

 



متعللقہ خبریں